Posted in Uncategorized

پہلا پارلیمانی سال اور ارکان کی کارکردگی

May 30, 2014   …جویریہ صدیق…

پاکستان کی چودہویں منتخب اسمبلی نے اپنا پہلا پارلیمانی سال مکمل کرلیا۔ یہ ایوان 2013 میں ہونے والے الیکشن کے نتیجے میں وجود میں آیا۔ پہلے پارلیمانی سال کی مدت یکم جون 2013 سے 30 مئی 2014 پر مشتمل ہے۔اس بار ایوان میں اکثریت مسلم لیگ نواز کی ہے اوران کی نشستوں کی تعداد 190 ہے جن میں ایک 149 جنرل نشستیں، 35 مخصوص نشستیں اور 6 اقلیتی ارکان شامل ہیں۔ مسلم لیگ ن کے بعد اسمبلی میں بڑی تعداد پیپلز پارٹی کی ہے جن کی نشستوں کی تعداد 46 ہے جس میں 37جنرل نشستیں، 8 مخصوص نشستیں اور ایک اقلیتی رکن کی نشست ہے۔ اس کے بعد پی ٹی آئی کا نمبر ہے جو34 نشستوں کے ساتھ پارلیمان میں تیسرے نمبر پر ہے جن میں 27 جنرل،6 مخصوص اور ایک نشست اقلیتی رکن کی ہے۔ چوتھی بڑی جماعت ایم کیوایم ہے اور اس کے ارکان کی تعداد 24 ہے، جس میں 19 جنرل، 4 مخصوص، ایک اقلیتی نشست ہے۔ پانچویں نمبر پر جمعیت علمائے اسلام ہے، جس کی کل 13 نشستیں ہیں، 9 جنرل، 3 مخصوص اور ایک اقلیتی نشست۔ مسلم لیگ (ف) 5 ، جماعت اسلامی 4، پختون خواہ ملی عوامی پارٹی 4، نیشنل عوامی پارٹی 2، پاکستان مسلم لیگ 2،اے این پی 2، بی این پی ایک، قومی وطن پارٹی شیر پاؤ گروپ ایک، مسلم لیگ ضیا ایک، نیشنل پارٹی ایک،عوامی مسلم لیگ ایک،اے جے ائی پی ایک، اے پی ایم ایل ایک اور آٹھ نشستوں کے ساتھ آزاد امیدوار نشستوں کے ساتھ نمایاں ہیں۔ قومی اسمبلی کے کل ارکان کی تعداد 342 ہے۔

اس پارلیمانی سال کا آغازیکم جون دو ہزار تیرہ سے ہوا اورپارلیمانی سال کا آخری اجلاس پانچ مئی دوہزار چودہ سے شروع ہوا اور سولہ مئی دو ہزار چودہ تک جاری رہا۔ اس پارلیمانی سال میں گیارہ اجلاس ہوئے اور ایک اجلاس مشترکہ بھی تھا جس میں صدر پاکستان نے خطاب کیا۔ اگر کارکردگی کی بات کریں تو یوں پارلیمانی کارروائی میں کوئی ایک دن بھی ایسا نہیں رہا جس میں ایوان سے تمام تین سو بیالیس ارکان موجود ہوں۔ وزیر اعظم پاکستان میاں محمد نواز شریف ایوان میں صرف سات بار آئے اور وزرا کا حال بھی کچھ ایسا ہی رہا، ایوان میں اکیس بار کورم نا پورا ہونے کی نشاندھی کی گئی۔

اپوزیشن بھی اس دوڑ میں پیچھے نا رہی، تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان پورے پارلیمانی سال میں صرف گیارہ بار ہی ایوان میںآ ئے۔ مولانا فضل الرحمان بھی کیوں پیچھے رہتے وہ بھی صرف پندرہ دن ایوان کو اپنا دیدار کرا گئے، یہی حال پرویز الہٰی کا بھی رہا۔ایوان کی کاروائی ایک سو اکتالیس دن چلی لیکن نیشنل پارٹی کے کامل خان اور آذاد امیدوار عثمان ترکئی صرف دو دن ہی ایوان میں آنے کا وقت نکال سکے۔ شاید ان سب معزز ممبران کو پارلیمان سے بھی کچھ زیادہ اہم کام نمٹانے ہوں گے۔ گیارہ بار اسمبلی کا اجلاس صرف اس ہی وجہ سے ملتوی ہوا کہ ارکان کی تعداد بہت کم تھی۔

پرائیویٹ ممبران کی طرف سے 43 بل ایوان میں پیش کیے گیے، جن میں سے ایک بھی منظور نا ہوسکا۔ گذشتہ پارلیمانی سال میں حکومت نے تیرہ بل اور بارہ آرڈیننس پیش کیے جن میں سے گیارہ بل منظور ہوئے جن میں فنانس بل دو ہزار تیرہ، فیڈرل کورٹ بل دوہزار چودہ، انسداد دہشت گردی ترمیمی بل دو ہزار چودہ، انسداد دہشت گردی دوسرا ترمیمی بل دو ہزار چودہ، لیگل پریکٹشنر و بار کونسل ترمیمی ایکٹ دو ہزار چودہ، نیشنل جوڈیشل کمیٹی ایکٹ دو ہزار چودہ،لاء اور جسٹس کمیشن آف پاکستان ترمیمی ایکٹ دوہزار چودہ، فیڈرل پبلک سروس کمیشن ترمیمی ایکٹ دو ہزار چودہ، سروے اور میپنگ ایکٹ دو ہزار چودہ، سروس ٹریبونل ترمیمی ایکٹ دو ہزار چودہ اور پروٹیکشن آف پاکستان ایکٹ شامل ہے۔

اگر ارکان کی کارکردگی اور حاضری کا جائزہ لیں تو فافن کے مطابق گیارہ اجلاس بلائے گئے، جن میں ننانوے نشستوں میں اسپیکر ایاز صادق تراسی بار ، ڈپٹی اسپیکر مرتضیٰ جاوید عباسی چھیاسٹھ بار ایوان میں آٰئے۔ لیڈر آف اپوزیشن خورشید شاہ ننانوے میں سے پیچھتر بار آئے اور نواز شریف وزیر اعظم پاکستان نے صرف سات بار ہی دیدار کرایا۔

پہلے پارلیمانی سال میں تو ایوان میں اراکین کی کارکردگی مایوس کن رہی اور صرف گیارہ بل ہی پاس ہوئے جن میں سے کوئی بھی قانون کی صورت اختیار نا کرسکا۔ شاید اس کی ایک وجہ یہ بھی ہو کہ ایوان بالا میں اکثریت پی پی کی ہے اور ایوان زیریں میں مسلم لیگ کی۔ حکومتی ارکان کی بھی عدم توجہی عروج پر رہی اور وہ ایوان سے زیادہ تر غیر حاضر رہے۔ امید پر دنیا قائم ہے دو جون سے دوسرے پارلیمانی سال کا آغاز ہو رہا ہے اور عوام کی یہ خواہش ہے ان کے منتخب نمائندے دوسرے پارلیمانی سال میں دل جمعی کے ساتھ کام کریں اور حاضری کو بھی یقینی بنایں اور موثر قانون سازی کریں تاکہ عوام کو اسکے ثمرات مل سکیں۔ – See more at: http://blog.jang.com.pk/blog_details.asp?id=9876#sthash.7irsL1hi.dpuf

Advertisements

Author:

Journalist writes for Turkish Radio & Television Corporation . Photographer specialized in street and landscape photography Twitter @javerias fb: : https://www.facebook.com/OfficialJaverias

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out /  Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out /  Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out /  Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out /  Change )

Connecting to %s